• Citizen Journalism Program

'ہم آپس میں'

ٹیم مہر دار آرٹ اینڈ پروڈکشنزکی جانب سے ۱۱ اکتوبر کو ماڑی پور ٹکری ایجوکیشن سینٹر میں ایک فلم اسکریننگ کی گئی جس میں " ہم آپس میں “ فلم لگائی گئی۔ اس پروگرام میں لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی اور اس فلم کو اپنے معاشرے کے لئے مثبت قرار دیا ۔

اس فلم کا مقصد تھا اس بات پر سوال اٹھانا کہ ہم کیوں اپنے معاشرے میں موجود مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے لوگوں کو تنگ نظری سے دیکھتے آئے ہیں۔ کیوں ہم ہندو یا کرسچن لوگوں کی پلیٹ میں کھانا نہیں کھاتے اور نہ گلاس میں پانی پیتے ہیں، کیوں ہم ایک دوسرے کے برے وقت میں ان کا ساتھ نہیں دیتے، کیونکہ وہ ہندو ہے وہ شعیہہے، آیا ہم فطری طور پر ایسے ہیں یا ہمیں سکھایا گیا ہے؟

فلم ’’ہم آپس میں‘‘کی کہانی ہی کچھ یوں ہے کہ ایک عمارت جس کا نام رونق منزل ہے اس میں مختلف برادری سے تعلق رکھنے والے لوگ رہائش پزیر ہیں۔ کسی کا شعیہ برادری سے تعلق ہے تو کسی کا سنّی برادری سے اور ایک فیملی ہندو برادری سے ہے۔

یہ فلم ۸ قسطوں پر مشتمل ہے اور ہر قسط میں ایک کہانی ہے جو ہمارے لیے بےحد ضروی ہے کیونکہ ہم مختلف فرقوں میں تقسیم ہوچکے ہیں۔

اس فلم میں دلیپ جو کہ ایک ہندو ہے مختلف مشکلات کا سامنا کرتا ہے، پہلے اس کے ہمسائے بھی اس کو تنگ نظری سے دیکھتے ہیں اور ایک دن اس کی بیٹی کی سالگرہ ہوتی ہے اور اسی دن وہ نوکری سے فارغ ہوجاتا ہے .اس کو تنخواہ بھی نہیں ملتی اور وہ اپنی بیٹی کے لئے کیک بھی نہیں خرید سکتا، جب اس معاملے کا ہمسایوں کوپتہ چلتا ہے تو شروع میں شکُور جو کہ ان کا ہمسایہ ہے ، وہ دلیپ کو ہندو ہونےکی وجہ سے ٹال دیتا ہے ، پھر شکور کی بیوی شکور کو دلیپ کی مدد کے لئےراضی کرتی ہے اور کہتی ہے کہ "آج ہم اس کی مدد نہیں کریں گے تو کل ہمارے ساتھ ایسا وقت آجائے تو ہم کیا کریں گے؟ آج دلیپ کی بیٹی کی سالگرہ ہے ، کل ہمارے بیٹے کی سالگرہ ہو اور ہمارے یہی حالات ہو تو کیا ہوگا؟

یہ سب سن کر شکور کیک لے کر دلیپ کی مدد کرتا ہے اس طرح وہ ایک پڑوسی ہونے کا فرض بھی نبھاتا ہے۔

فلم اسکریننگ کے اختتام پرموجود لوگوں سے فلم کے بارے میں بات چیت بھی کی گئی اور ہر کسی نے فلم کے بارے میں اپنا اظہار خیال پیش کیا۔ لوگوں نے اس فلم کو خوب سراہا اور ٹیم مہردارنے ٹکری ایجوکیشن سینٹر کے کاموں کو سراہتے ہوئے سینٹر کے پورے اسٹاف کا شکریہ ادا کیا۔

Contributor: Sabir Baloch

0 views

Recent Posts

See All

بلند حوصلے منزل کی پہچان ہوتے ہیں

نسیمہ کا تعلق کراچی کے علاقے گریکس ماڑی پور سے ہے۔ وہ گریکس کی با ہمؔت خواتین میں سے ایک ہیں۔ان کی دو بیٹیاں ہیں جن کی عمر بالترتیب ۵ اور ۷ سال ہے۔ نسیمہ کا کہنا تھا کہ ان کے شوہر کے انتقال کے بعد سسر

A Project by SIE in collaboration with KYI.

  • Facebook - White Circle
  • Twitter - White Circle
  • Instagram - White Circle